عمران خان کے نام تین خطوط

PAKISTAN-UNREST-SCHOOL-EDUCATION

محترم جناب عمران خان صاحب!

امید ہے کہ آپ، محترم پرویز خٹک اور کے پی کے حکومت کے تمام وزراء خیریت سے ہوں گے اور حکومتی مراعات اور سکیورٹی کا بھرپور استعمال فرما رہے ہوں گے۔جناب اعلیٰ آپکی حکومت نے سکولوں کی حفاظت کے پیش نظر اساتذہ کو ہتھیار فراہم کرنے کا جو اعلان کیا ہے اسے سن کر دلی خوشی ہوئی ۔ ہماری مدت سے یہ تمنا تھی کہ اساتذہ اور طلباء کے ہاتھ میں قلم اور کتاب کی جگہ بندوق ہو۔اگرچہ یہ اساتذہ بچوں کو زیور علم سےآراستہ کرنے کےلیے ان سکولوں کارخ کرتے ہیں ۔ لیکن  بچوں کی حفاظت کےلیےاگر ان کومسلح کردیا جائے تو کون سا کوئی  آسمان زمین پر آپڑے گا۔

کپتان صاحب  اس عظیم مشن کو شروع کرنے پر ہم آپکو مبارکباد دیتے ہیں اور اس میں آپ کی کامیابی کےلیے دعا گو ہیں۔ بندوق اور امن کا چولی دامن کا رشتہ ہے ۔ ہمیں معلوم ہے کہ حسب ِسابق پاکستان کے نام نہاد لبرلز اور خود ساختہ دانشور وں کا طبقہ  آپکے اس فیصلے کی مخالفت کرے گا۔ لیکن ہم امید کرتے ہیں کہ  آپ بھی حسب سابق مکمل عزم کے ساتھ اپنے منصوبے کی کاملیت پر  ایمان رکھیں  گے  اور ان کی چوں چاں کو درخور اعتنا نہیں سمجھیں گے۔

یہا ں اس بات کا تذکرہ بے جا نہیں ہوگا کہ  بندوق سے کھیلنے کا ہمارا وسیع تجربہ ہے ۔ اپنے اس تجربے کی روشنی میں ہم آپکو یہ بتانا مناسب سمجھتے ہیں کہ کے پی کے اندر اساتذہ کی ٹریننگ کا   کام ہم ڈاکوؤں کو سونپ دیا جاے ۔ہم  وثوق کے ساتھ کہہ سکتے ہیں کہ پولیس سے ٹریننگ حاصل کرنے کے بعد یہ  اساتذہ طالبان   کا مقابلہ کرنے میں ناکام رہیں گے ۔ہم آپکے علم میں یہ بات لانا ضروری سمجھتے ہیں کہ ہم نے تمام  پولیس مقابلوں میں اہلکاروں کو بدترین شکست سے دو چار کیا ہے۔اسکی دو مثالیں گوجرانوالہ اور اندرون سندھ ہماری برادری کی پولیس مقابلوں میں فتح ہے ۔ ہم آپکے سکولوں کے تمام اساتذہ کو ماہر نشانہ باز بنانے کی سو فیصد  گارنٹی دیتے ہیں ۔ ہماری خدمات مناسب قیمت پر حاصل کی جاسکتی ہیں۔ اساتذہ کے ہاتھ میں بندوق ہماری برادری کے روشن مستقبل کی ضمانت ہے۔

خیراندیش

صدر ، آل پاکستان ڈاکو ایسوسی ایشن (رجسٹرڈ )پاکستان

محترم جناب عمران خان !

چئیرمین پی ٹی آئی

بعداز سلام امید واثق ہے کہ آپکی شادی شدہ زندگی اور کے پی کے کی  حکومت اللہ کے فضل سے درست سمت پر گامزن ہوگی۔ ۔ (اس فقرے میں اللہ کے فضل کو فضل اللہ پرھنے سے گریز کیا جائے)

اساتذہ کو ہتھیار بند کرنے کے آپکے فیصلے سے دل بلیوں کتوں اچھل رہا ہے۔ جس دن آپکی حکومت نے یہ اعلان کیا ، اسی دن ہم نے اپنی تنظیم کا ہنگامی اجلاس طلب کیا اور اس نتیجے پر پہنچے کہ یہ بلاشبہ ایک عظیم منصوبہ ہے جسکی کامیابی کے لئیے ہم خصوصی دعائیہ تقاریب منعقد کرنے کا ارادہ رکھتےہیں اور اس سلسلے میں چند رقت آمیز دعائیں کرانے والے علماء سے رابطہ بھی کرلیا گیا ہے۔

عمران خان صاحب جیسا کہ آپکے علم میں ہے اور سارا ملک بھی  اس بات سے بخوبی واقف ہے کہ ہماری تنظیم کے کارکنوں کو اسلحہ چلانے کا نہایت وسیع تجربہ ہے۔ ہر سال ہم سینکڑوں کی تعداد میں اقلیتوں کے لوگوں کو پھڑکاتے ہیں ۔جو کہ ہماری تنظیمی مہارت کا منہ بولتا ثبوت ہے ۔ ہم یہ امید کرتے ہیں کہ اساتذہ کی ٹریننگ کے لئیے ہماری تنظیم کی خدمات حاصل کی جائیں گی ۔ ہم ٹریننگ کی تمام سہولیات مفت فراہم کرینگے بشرطیکہ آپکی حکومت جیلوں میں موجود ہمارے کارکنوں کی رہائی کا بندوبست کرے۔ بندوق چلانے کے علاوہ ہماری تنظیم سکول کے اساتذہ کو دستی بم بنانے، خود کش جیکٹ بنانے اور اسطرح کی دیگر چھوٹی موٹی  ٹریننگ مکمل ایمانداری اور دلجمعی سے فراہم کرے گی –

والسلام

امیر تنظیم، ا ب پ ت ٹ

محترم عمران خان!

السلام علیکم !!

ہم اللہ سے آپکی اور آپکے وزرا کی دن دگنی اور رات چوگنی ترقی کےلیے دعا گو ہیں ۔اللہ آپکی حکومت کو ہمیشہ ہمارے سروں پر قائم  رکھے۔آمین ثما آمین۔اب آتے ہیں اصل موضوع کی طرف۔ آپ کے علم میں ہوگا کہ آل پاکستان ایجوکیشن الائنس اینڈ کلاشنکوف کمپنی ایک غیر سرکاری تنظیم (این جی او) ہے جسکا   قیام نیا پاکستان کے ساتھ ہی عمل میں لایا گیا ہے۔ اس تنظیم کے بنیادی مقاصد میں اساتذہ اور بچوں کو تعلیمی میدان  کے ساتھ جہادی میدان میں بھی  تعلیم و تربیت فراہم کرنا ہے۔ اللہ کے فضل سے ہماری تنظیم پاکستان کی واحد تنظیم ہے جو بچوں میں مومن اور شاہین کے اوصاف بیک وقت  پیدا کرنے کی کوشش کررہی ہے۔

محترم عمران خان صاحب !  کلاشنکوف کمپنی کے اراکین نیا پاکستان میں سکولوں کے اندر” بندوق پھیلاؤ”مہم میں آپ کے شانہ بشانہ ہے  اور ہمارااس بات پر کامل ایمان  ہے  کہ آپکی ایماندار اور مستعد حکومت اور ہماری کمپنی مل کر اساتذہ کے اندر  کے کمانڈوز کو جگا سکتی ہے۔ہم اس سلسلے میں حکومت ِنیا پاکستان کو اپنی خدمات خلوص اور عقیدت کے ساتھ پیش کرتے ہیں ۔ ہمارے کنسلٹنٹ حضرات آپکی حکومت کو نہایت مناسب قیمت پراپنی مہارت سے فیض یا ب کریں گے ۔ انشا اللہ وہ وقت دور نہیں جب کے پی کے کا ہر استاد اور بچہ سکول سے ایک ماہر نشانہ باز طالب بن کر نکلے گا ! آزمائش شرط ہے ۔ سروس کی گارنٹی ہماری۔

مثبت جواب کا منتظر

ڈائریکٹر آل پاکستان ایجوکیشن الائنس اینڈ کلاشنکوف کمپنی

Comments are closed.